Skip to main content

سید عطاء المومن شاہ بخاری

سید عطاء المومن شاہ بخاری رحمۃ اللہ علیہ کا تعارف

حضرت سید عطاء المؤمن بخاریؒ ۷؍ربیع الاوّل ۱۳۶۰ھ؍ ۱۵؍اپریل ۱۹۴۱ء بروز ہفتہ امرتسر (انڈیا)میں پیدا ہوئے۔ قرآن کریم ناظرہ و حفظ کی تعلیم والدہ ماجدہ رحمہا اﷲ سے شروع کی۔ قیامِ پاکستان کے وقت حضرت امیر شریعت سید عطاء اﷲ شاہ بخاریؒ امرتسر سے لاہور آ گئے اور چند ماہ دفتر مجلس احرارِ اسلام میں قیام کے بعد نواب زادہ نصر اﷲ خان مرحوم کے ہاں خان گڑھ ضلع مظفر گڑھ میں تشریف لے گئے۔ وہاں سیلاب آ گیا اور ۱۹۴۸ء میں ملتان منتقل ہو گئے۔ حضرت سید عطاء المؤمن بخاریؒ نے اپنے برادرِ بزرگ حضرت مولانا سید ابو معاویہ ابوذر بخاری رحمۃ اللہ علیہ سے چند پارے حفظ کیے۔ جامعہ قاسم العلوم گھر کے قریب تھا اور حضرت قاری محمد اجمل رحمۃ اللہ علیہ یہاں استاذ تھے۔ تقریباً پندرہ پارے اُن سے حفظ کیے، قاری صاحب مدرسہ چھوڑ کر اپنے علاقہ دائرہ دین پناہ مظفر گڑھ چلے گئے تو حضرت امیر شریعت نے اُنہیں جامعہ خیر المدارس ملتان میں حضرت مولانا قاری رحیم بخش پانی پتی رحمۃ اللہ علیہ کے پاس داخل کرا دیااور یہیں ۱۹۵۳ء میں آپ نے حفظِ قرآن کریم مکمل کیا۔ عربی فارسی کی ابتدائی کتب حضرت مولانا مفتی محمود رحمۃ اللہ علیہ سے جامعہ قاسم العلوم ملتان میں پڑھیں۔ اس دوران حضرت امیر شریعت اُنہیں لے کر خانقاہِ سراجیہ کندیاں پہنچے اور حضرت مولانا محمد عبداﷲ لدھیانوی رحمۃ اللہ علیہ کے سپرد کیا۔